طیارہ گرنے کے بعد آگ لگنے سے گھروں میں موجود کافی لوگ جلس گئے ہیں: فیصل ایدھی

کراچی (قدرت روزنامہ) طیارہ گرنے کے بعد آگ لگنے سے گھروں میں موجود کافی لوگ جلس گئے ہیں . سربراہ ایدھی فاؤنڈیشن فیصل ایدھی نے کہا ہے کہ طیارہ گرنے کے مقام پر کافی لوگ کام کرتے تھے جو جلے ہیں، جلنے والے افراد کو نکال کر لے جارہے ہیں .

فیصل ایدھی طیارہ گرنے کے بعد حادثے کی جگہ پر خود پہنچ کر ریسکیو کے عمل میں حصہ لے رہے تھے انہوں نے اس حوالے سے میڈیا کو بتایا کہ جب طیارہ گرا تو اس سے آگ لگ گئی جس میں بہت سے لوگ جلے ہیں. خیال رہے کہ آج پی آئی اے کی لاہور سے اسلام آباد جانے والی پرواز لینڈنگ سے کچھ دیر قبل فنی خرابی کے باعث آبادی پر جاگری. جناح گارڈن میں طیارے کے ملبے سے 30 سے زائد مسافروں کو نکال لیا گیا، جہاز کے ملبے کے مقام سے5 سال کے بچے سمیت جناح ہسپتال میں پائلٹ سمیت 17 لاشیں بھی منتقل کی گئی ہیں. ڈائریکٹر ہیلتھ ہسپتال سیمی جمالی نے کہا کہ 2 مرد اور 6 خواتین کی لاشیں بھی جناح ہسپتال لائی گئیں. یہ ماڈل کالونی کے رہائشی ہیں. ان کو ملبے سے نکالا گیا ہے، جناح ہسپتال میں 6 زخمی افراد بھی لائے گئے. ہسپتال میں جو زخمی لائے گئے ان میں زیادہ تر جھلسے ہوئے ہیں. اسی طرح نجی ٹی وی کا کہنا ہے کہ جناح ہسپتال میں 18سے زائد لاشیں منتقل کر دی گئی ہیں. اسی طرح زخمی مسافروں کو ایمبولینسز میں ہسپتال پہنچایا جارہا ہے.جبکہ ملبے سے مسافروں کو نکالنے کا سلسلہ جاری ہے. دوسری جانب عینی شاہدین کا کہنا ہے کہ طیارے کا اگلا حصہ پہلے 4 منزلہ عمارت سے ٹکرایا، جس کے بعد طیارے میں آگ بھڑک اٹھی، اور دھماکا ہوا، طیارے کا جلتا ہوا ملبہ دوسرے گھروں اور گلیوں میں کھڑی گاڑیوں پر گرا تو ان میں بھی آگ لگ گئی. عینی شاہدین نے بتایا کہ سوا 2 بجے کے قریب ایک زور دار آواز آئی.جس کے بعد دھماکا ہوا. طیارہ گرنے سے ایئرپورٹ کے قریبی 7سے 8 گھر شدید متاثر ہوئے ہیں. گھروں پر طیارہ گرنے سے وہاں کھڑی کچھ گاڑیوں میں بھی آگ لگی، جس کے بعد زور دار دھماکے ہوئے، ماڈل کالونی کا علاقہ ہے یہاں کی گلیاں کافی تنگ ہیں، متاثرہ گھروں کے افراد ملبے تلے دبے ہوئے ہیں، خواتین نے بتایا کہ ان کے بچے لاپتا ہیں، ریسکیو ٹیموں نے متاثرہ گھروں کے افراد کی لسٹ تیار کرلی ہے، جس میں گھروں میں موجود تمام افراد کے نام شامل ہیں.

..


Top