اختلافات کےسائے میں اتحاد؟ وہ کام جسے امریکہ اور چین نے ملکر کرنے کااعلان کردیا

سان فرانسسکو(قدرت روزنامہ)اختلافات کےسائے میں اتحادکی باتیں . امریکہ اور چین نے کوروناوائرس کیخلاف ملکر کرنے کااعلان کیا ہے .

چینی خبررساں ادارے ژنہوا کے مطابق ایک آن لائن سیمینار میں دونوں ممالک کے مرکزی ماہرین صحت نے اتفاق کیا ہے کہ وہ کورونا وائرس کیخلاف جنگ کیلئے سائنسی طریقہ کار پر انحصار کریں گے. رپورٹ کے مطابق ہاورڈ یونیورسٹی کے پروفیسر بیری بلوم جو کہ اس ویبینارمیں شریک تھے کا کہنا تھا ہیلتھ کیئر ایک ملک کا لیکن صحت پر تحقیق ایک عالمی معاملہ ہے.

نئے قائم شدہ غیر منافع بخش کوویڈ.19 کے خلاف عالمی اتحاد(جی اے سی سی) کی شریک چیئرپرسن فلورینس فینگ نے کہا کہ ہمیں وائرس کے ماخذ کو تلاش کرنے کے لیے سائنسی طریقے بھی استعمال کرنا چاہیئں.ادھر امریکہ اور بیلجیئم کے سائنسدانوں نے ایک چھوٹے ذرے لاما جسے ونٹر بھی کہا جاتا ہے،کی نشاندہی کی ہے جو ممکنہ طور پر نئے کورونا وائرس کا راستہ روک سکتا ہے. فینگ کا مزید کہنا تھا کہ اگر ہم نےاس وائرس کو شکست دینی ہے تو ہمیں عالمی سطح پر مل کر کام کرنا ہوگااور کسی بھی قسم کی غلط معلومات کاشکار نہیں ہونا چاہیے.

انہوں نے کہا یہی وہ جذبہ ہے جس کی وجہ سے ہم اس ویبینار کو کرنے کے قابل ہوسکے ہیں. اس آن لائن گفتگو میں چین اور امریکا کی اعلیٰ یونیورسٹیوں کی متعددنمایاں شخصیات و سائنسدان شریک ہوئے. دوسری جانب امریکہ اور بیلجیئم کے سائنسدانوں نے ایک چھوٹے ذرے لاما جسے ونٹر بھی کہا جاتا ہے،کی نشاندہی کی ہے جو ممکنہ طور پر نئے کورونا وائرس کا راستہ روک سکتا ہے.

..


Top