چور کی داڑھی میں تنکا۔!!! چوہدری نثار کا پاکستان تحریکِ انصاف کے دھرنوں سے تعلق تھا یا نہیں؟ رانا ثنا اللہ بھی میدان میں آگئے

لاہور (قدرت روزنامہ) پاکستان مسلم لیگ (ن) کے رہنما رانا ثنا اللہ کا کہنا ہے کہ سابق وزیر داخلہ چوہدری نثار کا پاکستان تحریک انصاف(پی ٹی آئی) کے دھرنوں سے کوئی تعلق نہیں تھا . جیو نیوز کے پروگرام ‘جیو پاکستان’ میں گفتگو کرتے ہوئے رانا ثنا اللہ کا کہنا تھا کہ میں بھی دھرنے کے دوران امن و امان سے متعلق اجلاسوں میں شریک رہا ہوں، چوہدری نثار کا پی ٹی آئی دھرنوں سے کوئی تعلق نہیں تھا .

ضرور پڑھیں: کپتان کو چیلنج کرنے سے پہلے ہمارے کسی رکن اسمبلی کا سامنا کر کے دیکھو۔۔۔ پاکستان تحریک انصاف کے اہم ترین رہنما کا ایسا بیان کہ پوری پیپلزپارٹی کی قیادت تلملا اٹھی

رانا ثنا اللہ کا کہنا تھا کہ چوہدری نثار اجلاسوں میں موجود ہوتے تھے اور اس دوران ان سے متعلق ایسی کوئی بات سامنے نہیں آئی. خیال رہے کہ گذشتہ روز جیو نیوز کے پروگرام ’کیپیٹل ٹاک‘ میں گفتگو کرتے ہوئے ن لیگ کے رہنما و رکن قومی اسمبلی جاوید لطیف کا کہنا تھاکہ 2014میں پاکستان تحریک انصاف کے دھرنے کے لیے اُس وقت کے وفاقی وزیر داخلہ چوہدری نثار نے سہولت کار کا کردار ادا کیا. جاوید لطیف کا کہنا تھا کہ پاکستان ٹیلی وژن پر حملہ اور ریڈ زون میں داخل ہونے دینے میں سہولت کاری اُس وقت کے وفاقی وزیر داخلہ نے دی تھی. نہوں نے مزید کہا کہ نواز شریف کی واپسی کے لیے جی ٹی روڈ کا انتخاب کیا گیا

اور اس کی مخالفت کس نے کی؟ وہ بھی وزیرداخلہ ہی تھے، جی ٹی روڈ کی حمایت اور مخالفت کرنے والے آج کہاں کھڑے ہیں؟ خیال رہے کہ تحریک انصاف نے 2013 کے انتخابات میں مبینہ دھاندلی پر 2014 میں اسلام آباد کے ڈی چوک پر 126 روز تک دھرنا دیا تھا اور اس دوران مظاہرین نے پی ٹی وی اور پارلیمنٹ پر حملہ بھی کیا تھا. پاکستان مسلم لیگ (ن) کے رہنما و رکن قومی اسمبلی جاوید لطیف نے انکشاف کیا ہے کہ 2014 میں پاکستان تحریک انصاف کے دھرنے کیلئے اُس وقت کے وزیر داخلہ چوہدری نثار نے سہولت کار کا کردار ادا کیا. جیو نیوز کے پروگرام ’کیپیٹل ٹاک‘ میں گفتگو کرتے ہوئے جاوید لطیف نے کہا کہ وزیراعظم عمران خان نے ماضی میں پولیس وین سے لوگوں کو چھڑایا تھا، پی ٹی وی پر حملہ اور ریڈ زون میں داخل ہونے دینے میں سہولت کاری اُس وقت کے وفاقی وزیر داخلہ چوہدری نثار نے کی. انہوں نے مزید کہا کہ نواز شریف کی واپسی کیلئے جی ٹی روڈ کا انتخاب کیا گیا اور اس کی مخالفت کس نے کی؟ وہ بھی وزیرداخلہ ہی تھے، جی ٹی روڈ کی حمایت اور مخالفت کرنے والے کہاں کھڑے ہیں. خیال رہے کہ تحریک انصاف نے 2013 کے انتخابات میں مبینہ دھاندلی پر 2014 میں اسلام آباد کے ڈی چوک پر 126 روز تک دھرنا دیا تھا جس دوران مظاہرین نے پی ٹی وی اور پارلیمنٹ پر حملہ کیا تھا.

..

ضرور پڑھیں: بریکنگ نیوز:ن لیگی رہنما احسن اقبال اور پاکستان تحریکِ انصاف کے رہنما فرخ حبیب کورونا وائرس کا شکار


Top