فرانس میں کورونا کے مریضوں میں واضح کمی کے بعد لاک ڈاون میں نرمی

برسلز /دمام /پیرس(قدرت روزنامہ) فرانس میں بھی کورونا وائرس کے مریضوں کی تعداد میں واضح کمی آئی ہے، جہاں ہفتے کو 1 ہزار 50 نئے مریض سامنے آئے ہیں جس کے بعد فرانسیسی حکومت کی جانب سے ملک میں نافذ کورونا ہیلتھ ایمرجنسی میں 2 ماہ کی توسیع کا فیصلہ کیا گیا ہے . غیرملکی خبررساں ادارے کے مطابق فرانسیسی وزیرِ صحت نے بتایاکہ قانون سازوں کی منظوری کے بعد ہیلتھ ایمر جنسی کی مدت 24 جولائی تک کر دی جائے گی .

ضرور پڑھیں: لیبیا میں ترکی کی خلاف ورزیوں کا جواب دینے پرغور کر رہے ہیں، فرانس

فرانس میں 11 مئی سے لاک ڈاون نرم کرنے کا اعلان بھی کیا گیا ہے، ملک بھر میں اسکول 11 مئی سے کھول دیے جائیں گے.فرانس میں کورونا وائرس کے باعث مجموعی ہلاکتیں 24 ہزار 760 ہوگئیں جبکہ کورونا کیسز 1 لاکھ 68 ہزار 396 ہو چکے ہیں.کورونا وائرس کے فرانس میں 93 ہزار 74 مریض اب بھی مختلف اسپتالوں میں زیرِ علاج ہیں جن میں سے 3 ہزار 827 کی حالت تشویش ناک ہے

جبکہ 50 ہزار 562 کورونا مریض اب تک صحت یاب ہو کر اپنے گھروں کو لوٹ چکے ہیں. ادھر بیلجیئم نے بھی پیر سے لاک ڈاون میں نرمی کا ارادہ ظاہر کر دیا ہے، بیلجیئم آبادی میں کورونا وائرس سے اموات کی شرح کے حساب سے یورپ بھر میں سب سے آگے ہے.کورونا وائرس سے بیلجیئم میں 7 ہزار 765مریض اب تک جاں بحق ہوئے ہیں جبکہ اس وائرس سے متاثرہ مریضوں کی کل تعداد 49 ہزار 517 ہو چکی ہے.دوسری جانب سعودی عرب کے دمام ریجن کے ضلع الاثیر سے جزوی طور پر کرفیو اٹھانے کا اعلان کیا گیا ہے.کورونا وائرس سے سعودی عرب میں اب تک کل اموات 176 رپورٹ ہوئی ہیں جبکہ اس کے مریضوں کی تعداد 25 ہزار 459 تک جا پہنچی ہے.

..

ضرور پڑھیں: فرانس میں چین سے قبل کورونا شروع ہونے کا انکشاف


Top