چین پر ڈونلڈ ٹرمپ نے جان بوجھ کروائرس پھیلانے کا الزام لگا دیا امریکی خفیہ ایجنسی نے ٹرمپ کے الزامات کے بعد کرونا وائرس سے متعلق ایسا انکشاف کر دیا جس نے امریکی صدر کو بھی پریشان کر دیا

واشنگٹن (قدرت روزنامہ) امریکی صدرڈونلڈ ٹرمپ نے دعویٰ کیا ہے کہ انہوں نے کورونا وائرس ووہان کی لیبارٹری سے پھیلنے کے ثبوت دیکھے ہیں . وائٹ ہاوس میں کورونا ٹاسک فورس کے ہمراہ پریس بریفنگ میں ڈونلڈ ٹرمپ نے ایک بار پھر برہمی کا اظہار کرتے ہوئے کہا چین کورونا کو روکنے میں ناکام رہا یا جان بوجھ کروائرس پھیلایا .

ضرور پڑھیں: امریکا میں بھی کورونا سے لاکھوں افراد بے روزگار ، لیکن ڈونلڈ ٹرمپ کو وہ معیشت نہیں ملی تھی جو عمران خان کو ملی، حماد اظہر کھل کر بول پڑے

صدر نے امریکی خفیہ اداروں کی رپورٹ کی بھی تردید کر دی جس میں کہا گیا ہے کہ کورونا وائرس وہان کی لیبارٹری سے نہیں پھیلا.امریکی صدر ڈونلڈ ٹرمپ نے کہا ہے کہ کورونا وائرس ویکسین کی تیاری کا کام مزید تیز کر رہے ہیں. حکومت اور فوج نجی سیکٹر کے ساتھ مل کر دو ہزار بیس کے آخر تک دس کروڑ ویکسین تیار کر لیں گے.دوسری جانب امریکی خفیہ اداروں نے دعویٰ کیا ہے کہ کورونا وائرس انسانی تخلیق نہیں اور یہ مہلک وائرس کو جینیاتی تبدیلی کے ذریعے پیدا نہیں کیا گیا. ڈائریکٹر آف نیشنل انٹیلی جنس کے دفتر سے جاری بیان میں کہا گیا ہے کہ کورونا وائرس لیبارٹری میں تخلیق نہیں کیا گیا.امریکی خفیہ اداروں کا کہنا ہے کہ اس بات کا مزید جائزہ لیا جا رہا ہے کہ کیا کورونا وائرس جانوروں سے انسانوں میں منتقل ہوا یا کسی حادثاتی طور پر کسی لیبارٹری سے باہر آیا.امریکہ نے کورونا وائرس سے نمٹنے کے لیے سب سے متاثرہ ریاست نیویارک میں مزید اقدامات کیے ہیں اور ہر 24 گھنٹے کے بعد سب وے سسٹم کو ڈس انفیکٹ کیا جائے گا.گورنر نیویارک کے مطابق روزانہ رات ایک سے صبح 5 بجے تک سب وے اسٹیشنز بند ہوں گے تاکہ ٹرینوں کو ڈس انفیکٹ کیا جاسکے.علاوہ ازیں17 ہزار افراد کو بھرتی کرنے کا منصوبہ زیر غور ہے جو کورونا وائرس سے متاثرہ افراد کا پتہ لگائیں گے.

..

ضرور پڑھیں: عمران خان میرا اچھا دوست ہے ۔۔۔پاکستان سے کورونا کے مکمل خاتمے کے لیے ڈونلڈ ٹرمپ نے بڑا قدم اٹھا لیا


Top