عمران خان کا ’موقع پر چوکا‘ ۔۔!! اچانک اہم ذمہ داریاں جنرل (ر) عاصم سلیم باجوہ کے سُپرد کیوں کی گئیں؟ پوری قوم کے لیے سرپرائز، اپوزیشن جماعتوں کے لیے خطرے کی گھنٹی بج گئی

لاہور(قدرت روزنامہ)وزارت اطلاعات میں نئی حکومتی ٹیم،کیا وزارت اطلاعات پہلے سے زیادہ متحرک ہو جائے گی؟ جنرل (ر) عاصم سلیم باجوہ کو معاون خصوصی برائے اطلاعات بنانے کے پیچھے مقصد کیا ہے؟ سب کچھ سامنے آگیا . تفصیلات کے مطابق کابینہ میں کل ہونے والے رد و بدل کے بعد وزارت اطلاعات اب دو نئی شخصیات کے ہاتھ میں ہے .

جنرل (ر) عاصم سلیم باجوہ معاون خصوصی برائے اطلاعات اور شبلی فراز وزیر اطلاعات ہونگے.سیاسی اور صحافتی حلقوں میں اس تبدیلی کو مثبت اور خوش آئند قرار دیا جا رہا ہے اور اسکی وجہ ھے دونوں شخصیات کا میڈیا فرینڈلی ہونا.جنرل (ر) عاصم باجوہ سابقہ ڈی جی آئی ایس پی آر رہ چکے ہیں وہ ملکی تاریخ کے پہلے تھری سٹار جنرل ہیں جنہوں نے اس عہدہ پر کام کیا، انہیں جنرل راحیل شریف نے بطور ڈی جی آئی ایس پی آر لیفٹیننٹ جنرل کے عہدہ پر ترقی دے کر اس پوزیشن پر کام جاری رکھنے کا حکم دیا تھا. جنرل قمر جاوید باجوہ نے بعد میں انہیں جی ایچ کیو میں آئی جی آرمز اور پھر کمانڈر سدرن کمانڈ تعینات کیا تھا.1984 میں فوج میں کمیشن حاصل کرنے والے جنرل عاصم سلیم باجوہ نیو میڈیا، آن لائن میڈیا اور سوشل میڈیا ٹولز کو بھرپور طریقے سے استعمال کرنے اور کرانے کا فن بخوبی جانتے ہیں، ماضی میں فوج کے شعبہ تعلقات عامہ(آئی ایس پی آر) کو اپنےبام عروج تک پہنچایااو ر یہ بات زبان زد عام ہے کہ یہ جنرل عاصم باجوہ ہی تھے جنہوں

نے ٹوئیٹر پر فوج کے تعلقات عامہ کو 3 ملین فالورز دیے.ابلاغی حکمت عملیوں کے ماہر وزیر اعظم کےمعاون خصوصی برائے اطلاعات و نشریات لیفٹیننٹ جنرل(ر) عاصم سلیم باجوہ کا اہم ٹاسک مسئلہ کشمیر کو ہرفورم پر میڈیا کے ذریعے بھرپور طریقے سے اجاگر کرنا ہوگا.فوجی سروس کے دوران جنرل عاصم سلیم باجوہ نے تمغہ بسالت اور ہلال امتیاز جیسے اہم اعزازات حاصل کیے ہیں.لیفٹیننٹ جنرل (ر) عاصم سلیم باجوہ نومبر 2019 سے سی پیک اتھارٹی کےچئیرمین بھی ہیں.کہا جارہا ہے ان کی تقرری سے حکومتی سوشل میڈیا ٹیم مستحکم و متحرک ہوگی اور حکومت کے خلاف چلنے والی تمام مہموں کا بھرپور طریقے سے جواب دے گی.دوسری طرف وفاقی وزیر اطلاعات کا قلمدان سنبھالنے والے شبلی فراز معروف شاعر احمد فراز کے بیٹے ہیں. آپ نے 2008 میں تحریک انصاف میں شمولیت اختیار کی.شبلی فراز نے پی اے ایف سرگودھا اور ایڈ ورڈکالج پشاور میں اعلیٰ تعلیم کے بعد سول سروس آف پاکستان کا امتحان بھی پاس کیا لیکن والد مرحوم کے مشورے پرشبلی فراز نے بینکنگ کے شعبے کا انتخاب کیا ایک انٹر نیشنل بنک میں سینٹر ایگز یکٹو کی حیثیت سپین ،لندن ،امریکا ،جنو بی امریکا ،ونز ویلا میں خدمات انجام دیں.شبلی فراز نہایت دھیمے مزاج ،صلح جو اور میڈیا فرینڈلی شخصیت کے مالک ہیں. سینیٹر شبلی فراز کو وزیر اطلاعات ونشریات بنا نے کا فیصلہ کرونا وائرس کے ضمن میں ملک کو درپیش ہمہ جہتی بحر انوں میں میڈیا کے کردار کو مثبت ،فعال اور نتیجہ خیز بنا نے کے لیے کیا گیا.

..


Top