مسجد نبوی میں صفائی کے لیے جدید ترین مشینوں کا استعمال شروع ہو گیا

ریاض((قدرت روزنامہ) مسجد نبوی دُنیا بھر کے مسلمانوں کے لیے ایک اہم ترین مذہبی مرکز ہے . ہر سال یہاں پر کروڑوں لوگ آکر روضہ رسولﷺ پر حاضری دیتے ہیں اور عبادات بھی ادا کرتے ہیں .

اتنی بڑی تعداد میں لوگوں کے آنے کے سبب یہاں پر صفائی سُتھرائیء کا خیال رکھنا بھی بہت اہم مسئلہ ہے. جس سے نمٹنے کے لیے حرمین شریفین کی انتظامیہ کی جانب سے خصوصی اہتمام کیے جا تے ہیں. اسی سلسلے میں انتظامیہ کی جانب سے قالینوں اور فرش کی صفائی سُتھرائی اور دُھلائی کے لیے انتہائی جدید ترین مشینوں کا استعمال شروع کر دیا گیا ہے. العربیہ نیوز کے مطابق مسجد نبوی (صلی اللہ علیہ وسلم) کی صفائی کے سلسلے میں اندرونی فرشوں کو روزانہ تین مرتبہ دھویا جاتا ہے. اس مقصد کے لیے دھلائی کی 18 مشینوں کا استعمال کیا جاتا ہے. ان مشینوں کے ذریعے چھت سمیت حرم نبوی کے تمام حصوں اور توسیعات کو جراثیم کش مواد اور خوشبووٴں کے ساتھ صاف کیا جاتا ہے. اس کے علاوہ مسجد کے قالینوں کی صفائی ستھرائی کا عمل روزانہ چھ مرتبہ انجام دیا جاتا ہے. مزید برآں حجرہ مبارک کی مشرقی اور مغربی جالیوں کو ہر ہفتے صاف کیا جاتا ہے.سعودی روزنامے "مکہ" کے مطابق یہ تمام باتیں مسجد نبوی شریف میں

صفائی اور قالینوں کی نگراں انتظامیہ کے سربراہ خالد الرحیلی نے بتائیں. الرحیلی کا کہنا تھا کہ مسجد نبوی کی صفائی کے لیے کیمیائی مواد کے بدلے ماحول دوست مواد کا استعمال یقینی بنایا جاتا ہے. مسجد نبوی کے فضاوٴں کو خوشبو سے معطر رکھنے کے واسطے ستونوں میں موجود جالیوں کا استعمال کیا جاتا ہے.الرحیلی کے مطابق عام دنوں میں حرم نبوی کے اندر کھانے پینے کا مواد فراہم کرنے کی خدمات کے سلسلے میں 45 پرمٹ جاری کیے گئے جب کہ رمضان مبارک میں ان پرمٹس کی تعداد 3200 تک پہنچ گئی تھی.مسجد نبوی شریف میں صفائی اور قالینوں کی نگراں انتظامیہ کے سربراہ کا کہنا ہے کہ مسجد کے اندر روزانہ تین مرتبہ صفائی اور دھلائی کے واسطے ایک وقت میں 25 مشینوں کا استعمال ہوتا ہے جب کہ نقطہ عروج کے اوقات میں یہ تعداد بڑھا کر 45 تک کر دی جاتی ہے. اس دوران خصوصی کنٹینروں کے ذریعے مسجد کے اندر صفائی انجام دی جاتی ہے.

..


Top