’’اگر کسی نے مریم نواز اور جاتی امرا ءپر حملے کی کوشش کی تو پھر ہم ۔۔۔‘‘ (ن)لیگ نے جوابی حکمت عملی بنا لی

اسلام آباد (قدرت روزنامہ)مسلم لیگ ن کے رکن قومی اسمبلی خواجہ آصف نے کہا ہے کہ پی ٹی آئی کارکنوں نے رہائش گاہ پر حملے کرنے کی کوشش کی ،اگر نواز شریف کے گھر کا تقدس پامال کرنے کی کوشش کی گئی تو ہم مزاحمت کریں گے . ان کا کہنا تھا کہ حکومت اس تکلیف دہ صورتحال کو کہاں تک لے کر جائے گی ،ہمیں جنگ کاپیغام دیاجارہاہے ہم اس کیلئے تیار ہیں لیکن پھرسسٹم لپیٹاجائے گا .

قومی اسمبلی کے اجلاس میں خطاب کرتے ہوئے ان کا کہنا تھا کہ مخالفین کے گھروں کا تقدس پامال کرنے کی روایت لائی گئی ہے،ہم ایسے رویے رکھنے والوں کے چہرے نہیں بھولیں گے،گھروں کا تقدس پامال نہ کیاجائے،ایسے رویوں سے تشدد کی لہر شروع ہوگی.جبکہ دوسری جانب ایک خبر کے مطابق وفاقی وزیر مواصلات مراد سعید نے کہا ہے کہ نواز شریف کے گھر کے باہر ہونے والے احتجاج سے تحریک انصاف کا کوئی تعلق نہیں ہے، ہم اس طرح کے رویے کی مذمت کرتے ہیں.مسلم لیگ ن کے رہنما خواجہ آصف کی تقریر کے جواب میں قومی اسمبلی میں اظہار خیال کرتے ہوئے مراد سعید نے کہا آپ نے خود کہا کہ ووٹ کو عزت دو پھر کہا مجھے باہر جانے دو، نواز شریف کے گھر کے باہر ہونے والے احتجاج کی مذمت کرتے ہیں، جس گھر کی بات ہورہی ہے اسے ثابت کرنے میں 5 سال لگے، پہلے کہتے تھے کہ ہماری لندن تو کیا پاکستان میں بھی کوئی جائیداد نہیں ہے. تحریک انصاف کا اس احتجاج سے کوئی تعلق نہیں ہے اور ہماری پارٹی اس طرح کے رویے کی شدید مذمت کرتی ہے.انہوں نے خواجہ آصف کی تقریر کا جواب دیتے ہوئے کہا کہ ایوان میں بڑی دھمکیاں دی گئیں، یہ جانتے تھے کہ لندن سے واپسی پر ان سے سوال ہوں گے. عمران خان کی فیملی کے خلاف ان کی گفتگو سب نے سنی، خواجہ آصف وفاقی وزیر ہوتے ہوئے متحدہ عرب امارات سے دھوبی یا مزدور کی تنخواہ لیتے رہے .انہوں نے سلیمان شہباز کو کک بیکس سپیشلسٹ قرار دے دیا اور کہا کہ سبز رنگ کی بلٹ پروف گاڑی میں کرپشن کا پیسہ منتقل کیا جاتا رہا. مراد سعید نے کہا کہ احسن اقبال کے بھائی کو ٹھیکے کیسے ملے؟ ہم سوال تو پوچھیں گے، کیا شہباز شریف سے ٹی ٹی سے متعلق سوال پوچھا گیا؟ وہ شہزاد اکبر کے 18 سوالوں کا جواب کیوں نہیں دیتے؟ انہوں نے برطانوی صحافی کو عدالت لے کر جانا تھا لیکن اب تک کیوں نہیں لے کر گئے؟.تحریک انصاف حکومت کی جانب سے آرڈیننس پاس کیے جانے کے معاملے پر وفاقی وزیر نے کہا کہ ان کی حکومت نے ڈیڑھ سال میں صرف 19 آرڈیننس پاس کیے لیکن محترمہ بینظیر بھٹو کے پہلے 3 سالہ دور میں 357 آرڈیننس پاس کیے گئے، انہوں نے ہر سال129 آرڈیننس پاس کرائے لیکن تحریک انصاف کے 19 آرڈیننس پاس کرنے پر اتنا شور کیوں ہے؟ ایک سال میں 129 آرڈیننس پاس کرنے والے ہمیں جمہوریت نہ سکھائیں.

..


Top