پاک افغان سرحد پر بارودی سرنگ کا دھماکہ۔۔۔ ہلاکتوں کی اطلاعات موصول

چمن (قدرت روزنامہ) پاک افغان سرحد پر بارودی سرنگ کا دھماکہ، دھماکے باعث متعدد افغان فوجیوں کے ہلاک اور زخمی ہونے کی اطلاعات .

تفصیلات کے مطابق پاک افغان سرحدی علاقے میں بارودی سرنگ کا دھماکہ ہونے کی اطلاعات موصول ہوئی ہیں .

ضرور پڑھیں: افغانستان، جنازے میں شرکت کے لیے جانے والے خاندان کی گاڑی بارودی سرنگ سے ٹکرا گئی، 10 افراد جاں بحق

بتایا گیا ہے کہ سرحدی علاقے میں دھماکے کے باعث افغان فوج کی ایک گاڑی نشانہ بنی ہے.

بارودی سرنگ سے ٹکرانے کے بعد افغان فوج کی گاڑی مکمل طور پر تباہ ہوگئی.

جبکہ گاڑی میں موجود افغان فوجیوں کے ہلاک ہو جانے کی اطلاعات ہیں. تاہم تاحال یہ نہیں

بتایا گیا کہ دھماکے کے نتیجے میں کل کتنے افغان فوجی ہلاک ہوئے.

جبکہ ابھی یہ بھی معلوم نہیں

کہ آیا یہ دھماکہ افغانستان کی حدود میں ہوا یا افغان فوجی پاکستان کی سرحدی حدود کی خلاف ورزی کی کوشش کے دوران بارودی سرنگ کا نشانہ بنے.

دوسری جانب ایک خبر کے مطابق طالبان نے ان رپورٹس کو مسترد کیا ہے جن کے مطابق ان کی صفوں میں چین مخالف مشرقی ترکستانی (ایغور) مسلمان عسکریت پسند موجود ہیں.

طالبان ترجمان ذبیح اللہ مجاہد نے ایک بیان میں کہا ہے

کہ افغانستان میں ان مسلح گروہوں کی موجودگی سے متعلق یہ رپورٹیں افواہیں اور محض پروپیگنڈا ہیں‘انہوں نے کہا کہ یہ خبریں اس لیے جاری کی گئی ہیں

تاکہ طالبان اور ہمسایہ ملکوں کے مابین غیر یقینی صورت حال پیدا کی جا سکے اور خطے میں امریکی موجودگی کو درست قرار دیا جائے. طالبان ترجمان نے کہا ہے

کہ چند مغربی میڈیا اداروں نے ایک وڈیو شائع کی ہے جس میں ایغور شدت پسندوں کو طالبان کی صفوں میں دکھایا گیا ہے، جس میں وہ اسلحہ اٹھائے ہوئے اور ہموی اور پک اپ ٹرکوں کے ہمراہ کھڑے ہیں.

ذبیح اللہ مجاہد نے ایغور عسکریت پسندوں کی موجودگی کے دعوﺅں کو مسترد کیا تاہم انہوں نے ایغور کو مجاہدین قرار دیا ‘ذبیح اللہ مجاہد نے کہا ہے

کہ طالبان ہمسایہ ملکوں اور دنیا کو یقین دلانا چاہتے ہیں کہ افغانستان کی سرزمین کو کسی دوسرے ملک کے خلاف استعمال نہیں ہونے دیا جائے گا.

..

ضرور پڑھیں: شمالی وزیرستان میں بارودی سرنگ کے دھماکے میں پاک فوج کے 3جوان شہید، ایک زخمی


Top