single photo

گھر کے آگے سٹیشن قائم، بی آر ٹی پشاور منصوبے کا ایک اور نقص سامنے آگیا، معاملہ عدالت تک جاپہنچا

      پشاور(قدرت روزنامہ)بی آر ٹی منصوبے کا ایک اور نقص سامنے آگیا،گھر کے آگے سٹیشن قیام کرنے پر شہری نے بی آر ٹی منصوبے کیخلاف عدالت پہنچ گیا . حیات آباد کے رہائشی عدنان خان نے عدالت کو بتایا کہ اسٹیشن نمبر 31 میرے گھر کے سامنے بنایا گیا ہے .

شہری نے متعلقہ اداروں کی کوتاہی سےمتعلق کہا کہ بی آر ٹی منصوبے کے سٹیشن 31کی تعمیر کے وقت متعلقہ حکام کو شکایت بھی کر چکا ہوں .شہری نے درخواست دائر کرتے مزید کہا کہ گھر کے سامنے سٹیشن آنے پر رازداری متاثر ہورہی ہے.یاد رہے عدالت اور وزیراعظم پشاور بی آر ٹی کے بارے میں تحقیقات کی ہدایت کرچکے ہیں. وزیراعظم کی جانب سے وائم کردہ انکوائری کمیشن نے خیبرپختونخوا حکومت سے بی آر ٹی کا ریکارڈ طلب کر تے ہوئے کہا تھاکہ بسوں اور تعمیراتی کام کی پی سی ون کے مطابق لاگت بتائی جائے اور منصوبے کی لاگت کے تخمینے میں ردوبدل سے متعلق بھی بتایا جائے.واضح رہے کہ پشاور میں ٹرانسپورٹ کا منصوبہ بی آر ٹی پاکستان تحریک انصاف کے گزشتہ دورِ حکومت میں سابق وزیراعلیٰ پرویز خٹک کے دور میں شروع ہوا جو کئی تاریخوں کے باوجود تاحال مکمل نہیں ہوسکا ہے. گزشتہ دنوں صوبائی انسپکشن ٹیم نے اپنی رپورٹ میں بی آر ٹی منصوبے میں کئی خامیوں کی نشاندہی کی تھی، رپورٹ میں کہا گیا ہے کہ بی آر ٹی منصوبہ مناسب منصوبہ بندی کے بغیر شروع کیا گیا، ڈیزائن میں تبدیلی کے باعث منصوبے کی لاگت میں اضافہ ہوا اور عوام کے پیسے کو بی آر ٹی پر ضائع کیا گیا.تاہم وزیراطلاعات خیبر پی کےشوکت یوسفزئی نے حالیہ بیان میں کہا ہے کہ بی آرٹی منصوبہ ایک سال میں مکمل کرلیا جائےگا.

..

Top