single photo

اسٹیٹ بینک نے 50 روپے کا سکہ جاری کر دیا

اسلام آباد(قدرت روزنامہ) بابا گرونانک کی 550ویں سالگرہ کے موقع پر سٹیٹ بینک نے 50 روپے مالیت کا یادگاری سکہ جاری کر دیا،ملکی تاریخ میں پہلی بار کسی مذہبی شخصیت کے لیے یادگاری سکہ جاری کیا گیاہے . سٹیٹ بینک میں 50 روپے کے سکے کی تقریب رونمائی کے موقع پر گورنر اسٹیٹ بینک رضا باقر کا کہنا تھا کہ مذہبی شخصیت کا سکہ جاری کرنا اس بات کی عکاسی ہے کہ ملک میں مذہبی رواداری فروغ پا رہی ہے .

ضرور پڑھیں: اسٹیٹ بینک کا فری لانسرز اور پنشنرز کو مزید سہولیات دینے کا فیصلہ،فری لانس خدمات کی ادائیگی کی حد فی صارف1500 ڈالر ماہانہ سے بڑھا کر کتنی کر دی؟

اس سکے کو جاری کرنے کا مقصد بابا گرونانک کی امن کی کاوشوں کو اجاگر کرنا ہے.

جب کہ چئیرمین پاکستان سکھ کونسل کا کہنا تھا کہ اس سکے کے اجراء سے 14 کروڑ سکھ برادری آپکی شکر گزار ہے.سکے کے ایک رخ پر چاند ستارا جبکہ دوسری جانب گردوارہ دربارہ صاحب کرتارپور کی تاریخی عمارت کی تصویر بنی ہوئی ہے. خیال رہے کہ پاکستان نے ایک اور تاریخی قدم اٹھاتے ہوئے سکھ مت کے بانی بابا گرونانک کے 550 ویں جنم دن پر سکھ یاتریوں کیلئے کرتار پور راہ داری کھول دی. افتتاحی تقریب گوردوارے کے احاطے میں منعقد ہوئی جس میں سابق بھارتی وزیر اعظم من موہن سنگھ ، سابق کرکٹر نو جوت سنگھ اور بھارتی ادا کار سنی دیول اور بھارتی پنجاب کے وزیر اعلیٰ سمیت دنیا بھر سے سکھ یاتریوں کی بڑی تعداد شریک ہوئی

جبکہ پاکستان کی طرف سے وزیراعظم عمران خان کے ہمراہ وزیر داخلہ اعجاز شاہ، وزیر مذہبی امور پیرنور الحق قادری، معاون خصوصی برائے اطلاعات فردوس عاشق اعوان اور وزیراعظم کے معاون خصوصی برائے اوورسیز پاکستانی ذوالفقار بخاری بھی موجود تھے. %اس موقع پر وزیراعظم عمران خان نے کرتارپور راہداری کا افتتاح کیا اور پھر تقریب سے خطاب بھی کیا. ناد رہے کہ حکومتِ پاکستان نے 11 ماہ میں کرتار پور راہداری کی تعمیر ریکارڈ مدت میں مکمل کر لی اور گوردوارہ دربار صاحب کو دنیا کا سب سے بڑا گوردوارہ بنا دیا.

سکھ یاتری اسے بابا گورونانک کے 550 ویں جنم دن پرحکومتِ پاکستان کی طرف سے تحفہ قرار دے رہے ہیں، بھارتی سکھ یاتریوں کی طرف سے لائی گئی سونے کی پالکی یہاں نصب کر دی گئی ہے. حکام کی طرف سے بتایا گیا کہ گوردوارہ دربار صاحب پہلے 4 ایکڑ پر محیط تھا، اب اسے 42 ایکڑ پر وسعت دے کر دنیا کا سب سے بڑا گوردوارہ بنا دیا گیا ہے.ارد گرد کی 8 سو ایکڑ اراضی بھی گوردوارے کے لیے مختص کر دی گئی ہے، جبکہ گوردوارے سے ملحقہ 26 ایکڑ اراضی پر باغات اور 36 ایکڑ پر فصلیں اگائی گئی ہیں، تزئین و آرامئشکے علاوہ یہاں بارہ دری، لائبریری، میوزیم، مہمان خانہ اور لنگر خانہ بھی تعمیر کیا گیا ہے. کرتار پور راہداری ویزہ فری ہے،

بھارتی سکھ یاتری پاسپورٹ اسکین اور بائیو میٹرک تصدیق کروا کر صرف 20 ڈالر فی کس سروس چارجز ادا کر کے آسکیں گے تاہم جذبہ خیر سگالی کے تحت 9 نومبر افتتاح کے موقع پر اور 12 نومبر بابا گرونانگ کے جنم دن کے موقع پر انٹری فری رکھی گئی.بھارت سے آنے والے یاتری صبح آکر شام کو واپس چلے جایا کریں گے، کرتار پور راہداری کے راستے یومیہ 5 ہزار یاتری آسکیں گے، گوردوارے کی سیکیورٹی کیلئے 215 سی سی ٹی وی کیمرے نصب کیے گئے ہیں، مرد اور خواتین سکھ یاتریوں کے لیے الگ الگ تالاب بھی بنائے گئے ہیں.

..

ضرور پڑھیں: اسٹیٹ بینک نے آئندہ دو ماہ کیلئے مانیٹری پالیسی کا اعلان کردیا

Top