single photo

ٹرمپ، مودی اور عمران کا گٹھ جوڑ ہوگیاہے اور کشمیر بیچ دیا گیا، عمران خان کو ریاست مدینہ سے محبت نہیں،یہ مذہبی کارڈ استعمال کررہے ہیں، آزادی مارچ میں سنگین الزامات عائد کردیئے گئے

اسلام آباد(قدرت روزنامہ)جمعیت علمائے اسلام کے آزادی مارچ کے شرکاء سے خطاب کرتے ہوئے مقررین نے کہاہے کہ عمران خان کو ریاست مدینہ سے محبت نہیں،یہ مذہبی کارڈ استعمال کررہے ہیں، ٹرمپ، مودی اور عمران کا گٹھ جوڑ ہوگیاہے اور کشمیر بیچ دیا گیاہے،عمران نے امریکہ میں کہا کہ ہم نے القاعدہ کو ٹریننگ دی ایران میں جا کرکہاکہ ایران میں دہشت گردی پاکستان سے ہوتی ہے ان خیالات کا اظہار انھوں نے آزادی مارچ ودھرنا کے شرکا سے خطاب کرتے ہوئے کیا ان خیالات کااظہارپا کستان مسلم لیگ(ن)کے رہنما امیر مقام،نیشنل پارٹی کے سربراہ میرحاصل بزنجو، مولاناعبدالغفورحیدری،صوبائی امیر ڈاکٹر عتیق، اسلام آباد کے امیر مولاناعبدالمجید ہزاوری مفتی عبداللہ سمیت دیگر رہنماوں نے بھی خطاب کیا مولانا عبدالغفور حیدری نے کہا عمران نے کشمیر کو تین حصوں میں تقسیم کرنے کی بات کی عمران کی باتوں پر تو ریاست اور ریاستی ادارے خاموش رہے انہوں نے کہاکہ مودی آئے گا تو مسئلہ کشمیر حل ہوگا اس نے پورے پر قبضہ کرلیایہ سیاسی جنگ ہے یہ عمران خان سے جنگ ہے: ہماری عمران سے سیاسی جنگ ہے ادارے ہمیں یہ جنگ لڑنے دیں ہم بغیر تنخواہ کے ریاست کے نوکر ہیں ملک کے تحفظ کے لیے پوری کوشش کررہے ہیں قائد کے حکم تک ہم یہاں موجود رہیں گے اور آزادی مارچ کے جلسے جاری رہیں گے کسی میں ہمت ہے تو اس جلسے کو یہاں سے اٹھا کردکھائے صوبائی امیر ڈاکٹر عتیق الرحمان نے کہا کہ ان حکمرانوں کو پوری قوم نے مسترد کردیا ہے ان میں ملک چلانے کی سرے سیکوئی صلاحیت ہی نہیں نااہل اورنالایق حکمرانوں نے ملک کوبحرانوں سے دوچار کردیا ہے،میرحاصل بزنجونے کہاکہ ہمیں عزت کی کرسی چاہیے بے عزتی کی نہیں،حکومت کوہرصورت گھرجاناہوگا اپوزیشن متحد ہے انہوں نے کہاکہ عمران خان کو ریاست مدینہ سے محبت نہیں،یہ مذہبی کارڈ استعمال کررہے ہیں کشمیر کے مسئلہ پر مسلم ممالک کی بھی حمایت نہیں لے سکے ہیں پاکستان کو تنہا کردیا ہے، چین،ایران، افغانستان، سعودی عرب، یو اے ای تم سے ناراض ہیں اگر کشمیر سے محبت ہے تو کرتار پورکا راستہ کیوں کھولاہے،ظاہر ہے کشمیر بیچ دیا ہے ٹرمپ، مودی اور عمران کا گٹھ جوڑ ہوگیاہے اور کشمیر بیچ دیا گیاہے،ووٹ کو عزت نہ دینے کی وجہ سے ملک دو لخت ہواہم آج بھی کہتے ہیں ملک کو مضبوط کرناہے، یہ ہمارا ملک ہے صوبوں کو خودمختاری دی جائے، ملکی بقا کے خلاف پالیسیاں نہ بناوآج ان کی خارجہ،داخلہ پالیسیوں کے باعث ملک خطرے میں ہے،

مولانا عبدالمجید ہزاروی نے کہا کہ آزادی مارچ قوم کا نمائندہ ہے جس میں چاروں صوبوں سمیت آزاد کشمیر اورتمام اپوزیشن جماعتوں کی نمایندگی شامل ہے ہم اپنے مطالبات سے پیچھے نہیں ہٹیں گے موجودہ نااہل حکمرانوں کو جانا ہوگا مسلم لیگ ن کے رہنما امیر مقام نے کہا کہ پرامن احتجاج کی کامیابی پر مبارکباد دیتا ہوں ہم سب ملک کے لیے نکلے ہیں سوا سال میں ملک کا برا حال کردیاگیاہے یہی حالت رہی تو دوسال بھی یہ نظام نہیں چلے گااس حکومت میں ڈاکٹر،تاجر، مزدور، کارخانہ دار، طلبا وطالبات سب تکلیف میں ہیں امیر مقامملکی معیشت تباہ کردی گئی ہے،عام آدمی کا جینا مشکل ہوچکاہے آج بھی بجلی اڑھائی روپے فی یونٹ مہنگی کردی گئی ہے گیس، بجلی، پانی، پٹرول سب مہنگے کردیے گئے،انہوں نے حج بھی مہنگا کردیا ہے سیاستدانوں کے خلاف انتقامی کارروائیاں تو اپنی جگہ بائیس کروڑ عوام کو دلدل میں ڈال دیاہے، حالت یہ ہے سات سال میں ایک میٹرو بھی نہیں بنا سکے ہیں .

.

ضرور پڑھیں: جے یو آئی کے آزادی مارچ میں کنٹینر سے نوجوان کی ہلاکت،رہبرکمیٹی،فضل الرحمان،شہبازشریف ،بلاول و دیگر کیخلاف اندراج مقدمہ کی درخواست قابل سماعت ہونے سے متعلق فیصلہ محفوظ

.

ضرور پڑھیں: آزادی مارچ مولانا فضل الرحمان اور اپوزیشن جماعتوں کے لیے وبال جان بن گیا

Top