ہم جنس پرستی گلے پڑگئی۔۔۔ بھارتی وزیراعظم کے قریبی ساتھی کو زندگی کا سب سے بڑا دھچکا لگ گیا

لندن (قدرت روزنامہ)ہم جنس پرست گلے پڑ گئی، بھارتی وزیراعظم نریندر مودی کے قریبی دوست اور برطانوی پارلیمان کے رکن کیتھ واز کو ہم جنس پرستی اور برطانیہ میں منشیات کی خرید و فروخت کی تحقیقات کے باعث 6 ماہ کیلئے برطانوی پارلیمان کی رکنیت سے معطل کر دیا گیا . غیرملکی خبر رساں ادارے کے مطابق 62 سالہ کیتھ واز کا شمار طویل عرصے تک برطانیہ میں رکن اسمبلی کی خدمات انجام دینے والے بھارتی نژاز افراد میں ہوتا ہے، انہیں اپنے فلیٹ پر دو کم عمر ہم جنس پرستوں سے کوکین خریدنے اور ہم جنس پرستی کیلئے رقم کی ادائیگی پر تحقیقات کا سامنا ہے .

ضرور پڑھیں: پاکستانی دلہن کی بھارتی وزیراعظم سے اپیل۔۔!!! ایسا انوکھا واقعہ پیش آگیا کہ سرحدپار رشتہ داروں کیلئے مشکلات کھڑی ہوگئیں

لیبر پارٹی سے منتخب ہونے والے

رکن پارلیمان کیتھ واز کے حوالے سے انکشاف کیا گیا ہے کہ 2016 میں انہوں نے نہ صرف اعلیٰ قسم کی کوکین خریدی بلکہ ہم جنس پرستی کیلئے رقم بھی ادا کی. ہاؤس آف کامن کی کمیٹی کی جانب سے جاری کردہ تحقیقاتی رپورٹ میں انکشاف کیا گیا ہے کہ برطانوی رکن پارلیمان اور بھارتی وزیراعظم مودی کے قریبی دوست قواعد و ضوابط اور ضابطہ اخلاق کی سنگین خلاف ورزی کے مرتکب پائے گئے ہیں اور اس لئے انہیں 6 ماہ کے لئے معطل کیا جاتا ہے. واضح رہے کہ مودی جب بھی لندن کا دورہ کرتے ہیں تو اُن کا زیادہ تر وقت کیتھ واز کے ساتھ ہی گزرتی ہے.

..

ضرور پڑھیں: پاکستان میں طیارہ حادثے بھی بھارتی وزیراعظم نریندرا مودی بھی بول پڑے


Top