single photo

اقوام متحدہ نے مقبوضہ کشمیر میں انسانی حقوق کی سنگین خلاف ورزی پر آواز بلند کر دی ، قابض مودی حکومت کیلئے پیغام جاری کر دیا

کیلی فورنیا(قدرت روزنامہ) اقوام متحدہ کے ہائی کمشنر برائے انسانی حقوق نے مقبوضہ کشمیر میں انسانی حقوق کی سنگین خلاف ورزیوں پر تشویش کا اظہار کرتے ہوئے قابض مودی حکومت کو فی الفور انسانی حقوق کی بحالی کا مطالبہ کیا ہے . ایکسپریس نیوز کے مطابق اقوام متحدہ کے ہائی کمشنر برائے انسانی حقوق کے ترجمان روپرٹ کلویلی نے اپنے ایک بیان میں کہا ہے کہ تنظیم کو مقبوضہ کشمیر کی صورت حال پر گہری تشویش ہے، وادی میں انسانی حقوق معطل ہیں اور شہریوں کو ان کے جائز حقوق سے محروم رکھا جارہا ہے .

ضرور پڑھیں: حق خود ارادیت کی حمایت،اقوام متحدہ میں پاکستان کی بڑی کامیابی،پیش کردہ قرار داد اتفاق رائے سے منظور کرلی گئی

ترجمان روپرٹ کلویلی نے مزید کہا کہ بھارتی حکومت مقبوضہ کشمیر میں لاک ڈاون ختم کر کے معمولات زندگی کو فی الفور بحال کرے اور بنیادی انسانی حقوق کی فراہمی کو یقینی بنائے.روپرٹ کلویلی نے مزید کہا کہ بھارت نے وادی بھر میں غیر اعلانیہ کرفیو نافذ کر رکھا ہے،

اظہار رائے اور مذہبی آزادی پر قدغن لگائی گئی ہے، مواصلاتی نظام منقطع ہیں اور کاروباری سرگرمیاں ٹھپ ہیں.بیان میں مزید کہا گیا ہے کہ 5 اگست کے بھارتی اقدام کے بعد سے امن عامہ کی صورت حال بھی ابتر ہے، 6 افراد جاں بحق اور درجنوں زخمی ہوگئے ہیں جب کہ حریت اور سیاسی رہنماوں کو بلا جواز حراست میں رکھا ہوا ہے.

..

ضرور پڑھیں: شامی حکومت پر زہریلی گیس حملے کا الزام، اقوام متحدہ کی واچ ڈاگ رپورٹ غلط نکلی

Top