single photo

لبنانی وزیراعظم سعد الحریری نے عوام کے احتجاج پر استعفی دے دیا

بیروت (قدرت روزنامہ) لبنانی وزیراعظم سعد الحریری نے عوام کے احتجاج پر استعفی دے دیا ہے . تفصیلات کے مطابق سعد الحریری نے کہا ہے کہ عہدے آتے جاتے رہتے ہیں لیکن عزت اور ملک کا تحفظ اہم ہے .

ضرور پڑھیں: اسد عمر نے چئیرمین قائمہ کمیٹی برائے خزانہ سے استعفیٰ دے دیا

غیرملکی میڈیا کے مطابق انہوں نے ٹی وی پر نشر ہونے والے اپنے خطاب میں کہا کہ 13 روز سے لبنان کی عوام معاشی بحران کو روکنے کے لیے فیصلوں کی منتظر ہے، اور میں نے اس عرصے کے دوران راستہ تلاش کرنے کی کوشش کی ہے جس کے ذریعے عوام کی آواز سنی جاسکے. ان کا کہنا تھا کہ اب وقت آگیا ہے کہ ہم اس بحران کے اثرات کا سامنا کریں، میں اس وقت اپنا استعفیٰ دینے کے لیے صدارتی محل میں ہوں. ایک بیان میں سعد الحریری نے کہا کہ حکومت مخالف مظاہرین سے مذاکرات میں ناکامی اور بند گلی میں پھنسنے کے بعد انہوں نے استعفی دینے کا فیصلہ کیا ہے.

انہوں نے کہا کہ وہ اپنی حکومت کا استعفی صدر مشیل آؤن کو جمع کروائیں گے. سعد الحریری نے ساتھ ہی مظاہرین سے پرامن رہنے کی بھی اپیل کردی. قوم سے اپنے مختصر خطاب میں انہوں نے کہا کہ 13 دن سے لبنان کے عوام بحران کے کسی سیاسی حل کا انتظار کر رہے تھے تاکہ معاشی بحران سے بچا جا سکے. سعد الحریری نے کہا کہ میں نے اس عرصے کے دوران کوئی سیاسی راستہ تلاش کرنے کی کوشش کی جس کے ذریعے عوام کی آواز سنی جاسکے، لیکن ان کی یہ کوشش ناکام رہی. اپنے خطاب میں سعد الحریری نے کہا کہ اب وقت آگیا ہے کہ ہمیں اس بحران کا سامنا کرنے کے لیے بڑا جھٹکا کھانا پڑے گا. لبنان کے داروالحکومت بیروت اور دیگر شہروں میں جاری غیر معمولی مظاہروں نے سعد الحریری کی حکومت کی عملداری اور رٹ کو بری طرح متاثر کیا تھا. سعد الحریری کے استعفی کے اعلان سے چند لمحے قبل حزب اللہ اور امل تنظیم کے حامیوں نے بیروت میں واقع مظاہرین کے مرکزی کیمپ پر دھاوا بول دیا تھا اور ٹینٹ اکھاڑے تھے.

..

ضرور پڑھیں: سابق ڈی جی ایف آئی اے بشیرمیمن نے اپنی ریٹائرمنٹ سے سولہ روز پہلے استعفیٰ کیوں دیا؟ وجہ سامنے آ گئی

Top