single photo

دُبئی میں مقیم غیر مُلکی ملازمہ 7 سالہ بچے کی محبت میں مبتلا ہو گئی

دُبئی (قدرت روزنامہ) دُبئی پولیس نے ایک غیر مُلکی ملازمہ کو اپنے مالک کے چھوٹے بچے کے ساتھ نازیبا حرکات کرنے، ویڈیو بنانے اور اُس کی مار پیٹ کرنے کے الزام میں گرفتار کر لیا ہے . مقدمے کی سماعت کے دوران استغاثہ کی جانب سے بتایا گیا کہ 35 سالہ گھریلو ملازمہ کا تعلق فلپائن سے ہے .

جسے کچھ عرصہ پہلے ملازمت پر رکھا گیا تھا. اس کے ذمے گھر کے دوسرے کاموں کے علاوہ 7 سالہ بچے کا خیال رکھنا بھی تھا. تاہم وہ بچے کے ساتھ غلط قسم کی حرکات میں ملوث ہو گئی تھی. بچے کے والد نے بتایا کہ وہ کامروس آئی لینڈ سے تعلق رکھتا تھا. وہ وقوعہ کے روزالورقہ میں واقع اپنے گھر میں تھا. جب اُس نے اچانک اپنے بچے کے چیخنے چِلانے کی آوازیں سُنیں. میں فوراً دوڑ کر بچے کے کمرے میں گیا تو دیکھا کہ ملازمہ اُس کو ایک چھڑی سے پیٹ رہی تھی. یہ منظر دیکھ کر مجھے غصہ چڑھ گیا. میں فوراً ملازمہ کو لے کر پولیس اسٹیشن چلا گیا. جہاں ملازمہ کو گرفتار کر لیا گیا. تفتیش کے دوران ملازمہ کے موبائل فون سے میرے بچے کی برہنہ حالت میں ایک ویڈیو بھی مِلی. جس میں ملازمہ ویڈیو بناتے وقت میرے بچے سے با ر بار ”آئی لو یو“ بھی کہتی سُنائی دے رہی تھی. اُس کا یہ اقدام چائلڈ پورنو گرافی کے زمرے میں آتا ہے. اس موقع پر عدالت میں بچے کی برہنہ حالت میں بنائی گئی ویڈیو بھی پیش کی گئی.تاہم ملازمہ کا کہنا تھا کہ اُس نے بچے کی مار پیٹ ضرور کی،اور اُس کی فلم بھی بنائی، مگر اُس نے یہ ویڈیو چائلڈ پورنو گرافی کے لیے نہیں بنائی تھی. بس اُسے بچہ اچھا لگتا تھا. اسی وجہ سے اُس نے یہ حرکت کی. اس مقدمے کا فیصلہ 5 نومبر 2019ء کو اگلی سماعت کے موقع پر سُنایا جائے گا.

..

Top