single photo

ایف اے ٹی ایف کا اجلاس ،چین، ترکی اور ملائیشیا نے پاکستان کے دہشتگردی اور کرپشن کے خلاف کوششوں کو سراہا

پیرس(قدرت روزنامہ)پاکستان اور ایف اے ٹی ایف کے درمیان اہم مذاکرات میں پاکستان کی رپورٹ کا جائزہ لیا گیاجس پر ایف اے ٹی ایف حکام نے اظہار اطمینان کیا . فنانشل ایکشن ٹاسک فورس نے منی لانڈرنگ اور دہشت گردی کی مالی معاونت کے خلاف پاکستان کے اقدامات کو ابتدائی طور پر تسلی بخش قرار دے دیا .

میڈ یا رپورٹس کے مطابق پیرس می چین کی سربراہی میں ہونے والے ایف اے ٹی ایف اجلاس میں پاکستان کی نئی نیشنل رسک اسیسمنٹ کا جائزہ لیاگیا.چین، ترکی اور ملائیشیا نے پاکستان کے دہشتگردی اور کرپشن کے خلاف کوششوں کو سراہا .پاکستان سے پوچھے گئے اضافی سوالوں کے جواب کا سیشن بھی ہوا. پاکستانی وفد کے تمام ارکان نے سوالوں کے جواب دیئے.پاکستانی وفد نے بھارتی وفد کی جانب سے کیے گئے سوالوں کے جواب بھی دئیے. بھارتی وفد نے پاکستانی وفد سے دہشتگردی اور ان کے ٹھکانوں سے متعلق سوال کیا.پاکستان نے دہشتگردی کیخلاف رپورٹ پیش کی اور مدلل جواب دیا. پاکستان نے نئی نیشنل رسک اسیسمنٹ اسٹڈی مکمل کرکے 150 صفحات کی رپورٹ بھجوائی تھی، جس میں دہشت گردی کی مالی معاونت اور دہشت گردی کے خطرات کے حوالے سے 12 سے زائد صفحات شامل ہیں. رپورٹ میں کالعدم تنظیموں کے خلاف کارروائیوں اور استغاثہ سے متعلق آگاہ کیا گیا ہے. ایف اے ٹی ایف پاکستان کے حالیہ اقدامات سے مطمئن ہوئی تو اسے ’گرے ایریا‘ کی فہرست سے خارج کرنے کی کارروائی شروع ہو سکتی ہے. ناکافی پیش رفت کی وجہ سے پاکستان کے بارے اگلی سطح کے اقدامات لینے پر غور کیا جائے گا.

..

Top