single photo

پاکستانی تاریخ کا سب سے بڑا اور گیم چینجر منصوبہ ۔۔۔۔ پاکستان اور چین کے درمیان 8 ارب سے زائد مالیت کے منصوبے کا معاہدہ طے پا گیا

بیجنگ(قدرت روزنامہ) وفاقی وزیر ریلوے شیخ رشید احمد کا کہنا ہے کہ پاکستان ریلوے کی بحالی کے لیے ایک اہم منصوبہ ” ایم ایل ون ” 14 سالوں کے بعد اب حتمی شکل اختیار کر گیا ہے جبکہ فاسٹ ترین ریلوے ٹریک ” ایم ایل ٹو” کی فزیبلٹی رپورٹ بھی چائینہ کے وزیر ریلوے کے حوالے کر دی گئی ہے . تفصیلات کے مطابق پاکستان اور چین نے بالاخر سی پیک منصوبے کے تحت شروع ہونے والے پاکستانی ریلوے کے لیے منصوبے ایم ایل ون کو حتمی شکل دے دی ہے، اس حوالے سے شیخ ریشد جو کہ آج کل وزیر اعظم عمران خان کے ہمراہ ہی چائینہ میں موجود ہیں انہوں نے سرکاری گیسٹ ہاؤس میں میڈیا سے گفتگو کے دوران بتائی، شیخ رشید کے مطابق انہوں نے آج صبح ہی اپنے چینی ہم منصب سے ملاقات کی جس میں اس منصوبے کو حتمی شکل دی گئی ، شیخ رشید احمد کا کہنا تھا کہ وہ وزیر اعظم کے بھی دلی طور پر شکر گزار ہیں جنہوں نے اس منصوبے کی تکمیل میں خاص طور پر دلچسپی دکھائی، ایم ایل ون منصوبے کو حتمی شکل دینے کے بعد ایم ایل ٹو کی رپورٹ بھی تیار کر کے چین کے وزیر ریلوے کے سپرد کی جا چکی ہے، جیسے ہی ایم ایل ون منصوبے پر کام مکمل ہوجائے گا تو ساتھ ہی ایم ایل ٹو منصوبے کے تحت پاکستان میں فاسٹ ریلوے ٹریک منصوبے پر کام کرنے کی خواہش ہے .

شیخ رشید نے بتایا کہ جیسے ہی ایم ایل ون منصوبہ پایہ تکمیل کو پہنچ جائے گا تو پاکستان میں ریلوے ٹریک کی رفتار پینسٹھ سے ایک سو پانچ کلومیٹر فی گھنٹہ سے بڑھ کر ایک سو بیس سے ایک سو ساٹھ کے فی گھنٹہ پر کلومیٹر ہوجائے گی ، اگر اسی رفتار سے محکمہ ریلویز ترقی کرتا رہا تو پھر 2025 تک مال بردار نقل و حمل بھی بڑھ جائے گی جو کہ 6 سے 35 ٹن تک بڑھ جائے گی ، اس منصوبے سے پاکستان میں کراچی سے پشاور تک ریلوے لائنز کی لمبائی 1800 کلومیٹر تک بڑھ جائے گی جبکہ نیا سگنلنگ سسٹم بھی نصب کیا جائے گا ، نئے ٹریکوں پر کسی قسم کی کوئی بھی کراسنگ نہیں ہوگی .

..

Top