single photo

کسی جج کیخلاف تحقیقات،آئین صدرمملکت کواختیاردیتاہے،کونسل سے انصاف کی فراہمی کے علاوہ کوئی توقع نہ رکھی جائے،چیف جسٹس آصف سعید کھوسہ

اسلام آباد (قدرت روزنامہ)اسلام آباد(ڈیلی پاکستان آن لائن)چیف جسٹس آف پاکستان جسٹس آصف سعید کھوسہ نے سپریم جوڈیشل کونسل کی کارروائی کو مشکل ترین قراردیدیا . چیف جسٹس آصف سعید کھوسہ نے کہا کہ کونسل بغیرکسی خوف،بدنیتی یادباؤاپناکام جاری رکھے گی،کونسل سے انصاف کی فراہمی کے علاوہ کوئی توقع نہ رکھی جائے .

تفصیلات کے مطابق سپریم کورٹ میں نئے عدالتی سال کی تقریب سے خطاب کرتے ہوئے کہاکہ کسی جج کیخلاف تحقیقات،آئین صدر مملکت کواختیاردیتاہے،صدرمملکت کی کسی جج کیخلاف شکایت کونسل رائے پراثراندازنہیں ہوتی،کونسل اپنی کارروائی میں آزاداوربااختیارہے،چیف جسٹس پاکستان نے کہاکہ گزشتہ سال کونسل میں 102 شکایات کااندراج ہوا،صدرمملکت کی جانب سے دائر 2 ریفرنسزشامل ہیں،صدرمملکت کے بھجوائے گئے دونوں ریفرنسزپر کارروائی جاری ہے،چیف جسٹس آصف سعید کھوسہ نے کہا کہ گزشتہ سال کونسل نے 149 شکایات نمٹائیں،سپریم جوڈیشل کونسل میں 9 شکایات زیرالتواہیں، چیئرمین سپریم جوڈیشل کونسل اورتمام ارکان اپنے حلف پرقائم ہیں،چیف جسٹس پاکستان نے کہا کہ کونسل بغیرکسی خوف،بدنیتی یادباؤاپناکام جاری رکھے گی،کونسل سے انصاف کی فراہمی کے علاوہ کوئی توقع نہ رکھی جائے.

..

Top