single photo

مردوں کے لیے انڈرویئر پہننا کتنا خطرناک ہوسکتا ہے؟

اسلام آباد (قدرت روزنامہ) سائنسدانوں کے مطابق یہ مختصر لباس مردانہ صحت کے حق میں اچھا نہیں ہے.قدرت نے سپرم کو اچھی کوالٹی میں محفوظ رکھنے کیلئے خصیے جسم سے باہر رکھے ہیں کیونکہ سپرم کو قدرے کم درجہ حرارت کی ضرورت ہوتی ہے اور جسم سے باہر واقع ہونے پر خصیوں کا درجہ حرارت باقی جسم سے تقریباً 2 سے 3 ڈگری کم ہوتا ہے. لندن کے ولنگٹن ہسپتال کے ڈاکٹر ایڈم فریڈمین کے مطابق انڈروئیر پہننے سے خصیے سمٹ کر جسم کے ساتھ لگے رہتے ہیں جس کی وجہ سے ان کا درجہان کا درجہ حرارت بڑھ جاتا ہےاور یہی وجہ ہے کہ سپرم کی صحت، حرکت اور طاقت میں کمی آ جاتی ہے.

اس کے علاوہ انڈروئیر کی وجہ سے بھی جسم کا درجہ حرارت قدرے زیادہ رہتا ہے اور اسے باقاعدگی سے تبدیل نہ کرنے کی صورت میں انفیکشن اور الرجی کا مسئلہ بھی سامنے آ سکتا ہے. ڈاکٹر فریڈ مین کے مطابق زیادہ تنگ اور زیادہ لچکدار انڈروئیر زیادہ نقصان دہ ہیں جبکہ ڈھیلے ڈھالے اور ہوادار انڈروئیر خصوصاً وہ جو کاٹن کے بنے ہوں قدرے بہتر ہیں.

. .

ضرور پڑھیں: مردوں کے لیے انڈرویئر پہننا کتنا خطرناک ہوسکتا ہے؟

ضرور پڑھیں: انڈرویئر کی ماڈلنگ کرنے والی یہ لڑکی دراصل کون ہے، حقیقت سامنے آئی تو دنیا بھر کے مردوں کے ہوش اُڑگئے کیونکہ۔۔۔

Top