بڑی خبر : نیوزی لینڈ کی حکومت نے انگلش آل راؤنڈر بین اسٹوکس کو ایک خاص وجہ سے بڑا انعام دینے کا فیصلہ کر لیا

ویلنگٹن(قدرت روزنامہ)نیوزی لینڈ کرکٹ ٹیم کے کپتان کین ولیمسن اور انگلینڈ کے آل راؤنڈر بین اسٹوکس کو ‘نیوزی لینڈر آف دی ایئر ایوارڈ کیلئے نامزد کرلیا گیا . کیوی کپتان کین ولیمسن کو یہ اعزار کرکٹ ورلڈ کپ 2019 میں بہترین کپتانی اور کارکردگی کا مظاہرہ کرنے پر دیا جائے گا .

ضرور پڑھیں: حکومت کا ناراض اتحادی جمہوری وطن پارٹی کو منانے کے لئے بڑا قدم

نیوزی لینڈر آف دی ایئر ایوارڈ کے لیے انگلش ٹیم کے آل راؤنڈر بین اسٹوکس کو بھی نامزد کیا گیا ہے.چیف نیوزی لینڈر ایوارڈ نے بین اسٹوکس کو ایوارڈ کے لیے نامزد کرنے کی وضاحت کرتے ہوئے بتایا کہ بین اسٹوکس نیوزی لینڈ کی جانب سے نہیں

کھیلے لیکن وہ نیوزی لینڈ کے شہر کرائسٹ چرچ میں پیدا ہوئے اس لیے انہیں اس ایوارڈ کے لیے نامزد کیا گیا.انہوں نے بتایا کہ بین اسٹوکس اپنے والد کے ہمراہ 12 سال کی عمر میں انگلینڈ چلے گئے تھے، انہوں نے انگلینڈ میں قیام کرنے کو ترجیح دی جب کہ والدین نیوزی لینڈ میں ہی مقیم ہیں.واضح رہے کہ نیوزی لینڈ کے کپتان کین ولیمسن نے ورلڈ کپ 2019 میں 11 میچز میں 578 رنز اسکور کئے جو کسی بھی کپتان کی جانب سے ایک ورلڈ کپ میں سب سے زیادہ رنز ہیں، اس کے علاوہ ولیمسن پلیئر آف ٹورنامنٹ بھی قرار پائے جبکہ ورلڈکپ میں انگلینڈ کی کامیابی کا جب تذکرہ ہوگا تو بین اسٹوکس کا نام ضرور یاد کیا جائیگا، بین اسٹوکس نے حالیہ ورلڈکپ میں 468 رنز اسکور کیے اور فائنل میں 84 رنز کی شاندار کارکردگی پر مین آف دی میچ قرار پائے.

..

ضرور پڑھیں: حکومت کا نیویارک میں پی آئی اے کی ملکیت ہوٹل کی نجکاری نہ کرنے کا فیصلہ


Top